38

کھلاڑیوں کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنے پر بورڈ نے انہیں تنہاءچھوڑ دیا جبکہ محمد حفیظ نے تو۔۔۔ انضمام الحق نے آل راﺅنڈر کیساتھ بورڈ کو بھی آڑے ہاتھوں لے لیا افسوسناک انکشاف بھی کر ڈالا

[ad_1]

”کھلاڑیوں کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنے پر بورڈ نے انہیں تنہاءچھوڑ دیا جبکہ محمد … لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز سابق کپتان اور چیف سلیکٹر انضمام الحق نے کہا ہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے کورونا ٹیسٹ مثبت آنے پر کھلاڑیوں کو تنہاءچھوڑ دیا جبکہ محمد حفیظ نے بھی نجی لیبارٹری کی رپورٹ سوشل میڈیا پر شیئر کر کے غلط کیا کیونکہ اس اقدام کا بھارت نے بہت فائدہ اٹھایا۔ تفصیلات کے مطابق انضمام الحق نے کہا کہ کورونا ٹیسٹ کے معاملے پر بورڈ اور کھلاڑیوں میں رابطے کا فقدان نظر آیا، بورڈ نے 10 کھلاڑیوں کو کورونا ٹیسٹ مثبت آنے پر انہیں تنہاءچھوڑ دیا اور گھر بھیجتے ہوئے قرنطینہ اختیار کرنے کی ہدایت دیدی حالانکہ ایسا نہیں ہونا چاہئے تھا اور پی سی بی کو یہ معاملہ خود دیکھنا چاہئے تھا، 10 کھلاڑیوں کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنا تشویشناک بات ہے اور یہ انکشاف ہونے پر بورڈ کو کھلاڑیوں کی دیکھ بھال اپنے ہاتھ میں رکھنی چاہئے تھی اور انہیں نیشنل کرکٹ اکیڈمی (این سی اے) لاہور میں ٹھہرایا جا سکتا تھا۔ سابق کپتان نے کہا کہ محمد حفیظ کا نجی لیبارٹری سے ٹیسٹ منفی آنے کے بعد کنفیوژن ہوئی اور انہیں نجی لیبارٹری سے کرائے گئے ٹیسٹ کی رپورٹ سوشل میڈیا پر شیئر نہیں کرنی چاہئے تھی کیونکہ اس اقدام کے بعد بہت سے لوگوں نے سوال اٹھایا اور بھارت نے اس معاملے کو بہت ہوا دی، محمد حفیظ کو چاہئے تھا کہ وہ پہلے بورڈ سے رابطہ کرتے۔

مزید :

کھیل –

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں