48

بجٹ میں میں تاجروں کو مراعات دی جائیں، آل پاکستان انجمن تاجران

[ad_1]

آل پاکستان انجمن تاجران نے چھوٹے تاجروں کو بجٹ میں مراعات دینے کا   مطالبہ کیا ہے۔ مرکزی سیکرٹری جنرل نعیم میر نے شناختی کارڈ کی شرط ختم  اور بجٹ میں چھوٹے تاجروں کو سہولت دینے کا بھی مطالبہ کیا۔لاہور سے جاری اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ تعمیراتی شعبےکی طرز پر سب کو سرمایہ کاری کی اجازت دی جائے۔انہوں نے فکسڈ ٹیکس اسکیم کا اجرا، انکم ٹیکس آمدن کی حد 4 لاکھ روپے سے بڑھاکر 8 لاکھ روپے کرنے، ڈسٹری بیوٹرز اور ہول سیلرز کا ٹرن اوورٹیکس 0.25 فیصد کرنے اور چھوٹےتاجروں کی اِنکم ٹیکس میں رجسٹریشن کے لیے سادہ فارم جاری کرنے کا بھی مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ پوائنٹ آف سیلز لگانے کی پالیسی پر نظرثانی کی جائے،  ریجنل سطح پر بنائی گئی کمیٹوں کو فعال کیا جائے، پچھلے سال سے 25فیصد زیادہ ٹیکس ادا کرنے والے تاجر کو آڈٹ سے استثنیٰ دیا جائے۔نعیم میر کا مزید کہنا تھا کہ سیلز ٹیکس میں لازمی رجسٹریشن کے قانون کو بدلا جائے اور جہاں ریونیو نہیں لینا، وہاں سیلزٹیکس کی رجسٹریشن ختم کی جائے۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں