33

پٹرول مہنگائی پر یوٹرن نہ لیا تو عمران خان کو امپائر بھی نہیں بچا سکتا

ہم نے آمروں کا مقابلہ کیا،کٹ پتلی وزیراعظم کا بھی کر بیٹے کی معاشی صورتحال دن بدن خراب ، دکا میں گرائی جا


رہی ہیں دنیا جانتی ہے عمران کو حکومت کیسے ملی ، وہ عدم تحفظ کا شکار ، خارجہ پالیسی سے نابلد ہیں: چلاس میں خطاب،
پریس کانفرنس اسلام آباد ، چلاس (وقائع نگار ، نما سند دایہ پر لیں) پیپلز پارٹی کے چیئر مین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے عمران خان عدم تحفظ کا شکار ہیں ، ان کی حکومت کمزور ہے ، ہم نے ضیاء اور مشرف جیسے آمر کا مقابلہ کیا ،

اس کٹھ پتلی وزیراعظم کا بھی مقابلہ کرینگے ، خان صاحب پٹرول اور مہنگائی پر یوٹرن نہ لیا تو آپکو امپائر بھی نہیں بچا سکے گا۔ بلاول بھٹو زرداری نے گلگت بلتستان کے دورے کے آخری روز گلگت میں پر یس کا نفر نس اور چلاس میں جلسے سے خطاب کیا ۔

بلاول نے کہا حکومت نے کرپشن کے خاتھے کے لیئے کچھ نہیں کیا ، یہ صرف سیاسی مخالفین کو دباؤ میں لانا چاہتے ہیں تا کہ ان کی سیا کی مخالفت نہ کی جائے، دنیا جانتی ہے کہ خان صاحب کو حکومت کیسے ملی۔ غیر جمہوری قوتوں کا نتب کر وہ وزیراعظم خارجہ پالیسی سے نابلد ہے ،

بیرون ملک بات کرتے ہیں تو بھول جاتے ہیں ایک ملک کی نمائندگی کر رہے ہیں ، یہ روایت نہ بدلی تو ہم بھی اپنی زبان کھول کر چوری کے مینڈیٹ سے آئیحکومت کی حقیقتیں سامنے لائیں گے ، ہم بھی دنیا کو بتا سکتے ہیں کہ عمران خان کو حکومت کیسے ملی، عمران خان کی سیاسی ناپختگی کا یہ عالم ہے کہ وہ آج بھی کنٹینز والی سیاست کر رہا ہے ،

ان کا لب و لہجہ اور طرز تکلم ایک وزیراعظم کے شایان شان نہیں ، چیئر مین پیپلز پارٹی نے کہا حکومت نے عوام کو مہنگائی کے سونامی میں ڈبو دیا ہے دوسری جانب ملک کے مختلف علاقوں میں تجاوزات کے نام پر دکھ میں اور مارکیٹیں گر کر عوام پر معاشی حملے کئے جار ہے ہیں، وفاقی حکومت فوری طور پر ان ظالمانہ معاشی پالیسیوں کو ترک کرے ، خان صاحب کو ہر یو ٹرن پر پڑیں گے ، آپ یوٹرن لیتے رہیں گے ،

ہم عوام سے کئے وعدے یاد دلاتے رہیں گے، بلاول نے سندھ حکومت کے تعاون سے گلگت بلتستان میں ذوالفقار علی بھٹو میڈیکل یو نیورسٹی کے کیمپس بنانے کا اعلان کیا اور کہا وہ سندھ کے تعلیمی اداروں میں گلگت بلتستان کے طلبہ کے لئے میڈیکل اور انجینئر نگ کی سیٹوں کا کو نہ بڑھانے کے لئے وزیراعلی سندھ کو ہدایات جاری کریں گے ،

کراچی میں گلگت بلتستان کے عوام کو امراض قلب کے جدید ترین ہسپتالوں میں مفت علاج کی سہولت دیں گے ، پیپلز پارٹی سی پیک میں گلگت بلتستان کا زیادہ حصہ دلوانے کے لئے پارلیمنٹ میں آواز اٹھائے گی ۔ بلاو گلگت بلتستان کا دورہ مکمل کر کے جمعرات کی شام واپس اسلام آباد پہنچ گئے ،

آصف علی زرداری نے بھی اپنے پیغام میں بلاول کے شاندار استقبال پر گلگت بلتستان کے عوام کا شکریہ ادا کیا اور کامیاب دورے پر کارکنوں و تنظیم کو مبارکباد دی اور کہا گلگت بلتستان شہید بھٹو کے لاڈلوں کا علاقہ ہے،

محترمہ بے نظیر بھٹو شہید کے بہادر بھائیوں کا صوبہ ہے، یہاں کے عوام کی خدمت پیپلز پارٹی کی ترنی ہے۔ علاوہ ازیں بلاول ہاؤس سے جاری اپنے تعزیتی بیان میں بلاول بھٹوزرداری نے کہا کہ فہمید ریاض ترقی پسندی کی علمبردار ، حقوق نسواں کی محافظ تھیں، ان کی ادبی خدمات قوم کے لیے بیش بہا خزانہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کی قیادت کان سے محبت و احترام کا رشتہ رہا ہے۔ بلاول نے کر تار پور راہداری کھولنے کے فیصلے کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ بینظیر بھٹو کے خواب کی تعبیر ہے۔ 25 سال قبل شہید محترمہ بینظیر بھٹو نے ہی یہ تجویز دی تھی کہ یاتریوں کو کر تار پر ویزا کے بغیر آنے کی اجازت ملنی چاہیے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں