گوگل پر سب سے زیادہ سرچ کی جانے والی بھارتی گلوکارہ کے بچوں کو قتل کی دھمکیاں

بھارتی گلوکارہ کانیکا کپور رواں سال سب سے زیادہ سرچ کی جانے والی شخصیات میں سے ایک ہیں اور اس کی وجہ مارچ میں ان میں کورونا وائرس کی تشخیص ہے۔

گلوکارہ نے برطانیہ سے واپسی پر قرنطینہ کرنے کے بجائے لکھنؤ کے تاج ہوٹل میں پارٹی میں شرکت کی تھی جس پر ان کے خلاف مقدمہ بھی درج کیا گیا تھا۔

بعد ازاں گلوکارہ کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا اور اس حوالے سے اب کانیکا کپور نے بڑے انکشافات کیے ہیں۔

اپنے حالیہ انٹرویو میں گلوکارہ نے بتایا کہ وہ دور میرے اور خاندان کیلئے مشکل ترین تھا کیونکہ ہمیں نہیں معلوم تھا ہمارے ساتھ کیا ہورہا ہے جبکہ میڈیا اور عوام ہمارے خلاف ہوگئے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ جب لندن سے واپسی آئی تو قرنطینہ میں رہنے کا کوئی قانون نہیں تھا16 مارچ کے بعد بخار ہوا تو چیک اپ کرایا جس میں کورونا کی تشخیص ہوئی لیکن مجھ پر الزام لگا کہ میں نے ائیرپورٹ پر چیک ہی نہیں کرایا۔

کونیکا نے بتایا کہ اس دوران مجھے، میرے بچوں اور خاندان کو قتل کی دھمکیاں مل رہی تھیں اور ہم سب پریشان و خوفزدہ تھے، کوئی کہہ رہا تھا مجھے مر جانا چاہیے تو کوئی کہہ رہا تھا کہ کیرئیر ختم ہوگیا، ان سب چیزوں نے مجھے جھنجھوڑ کر رکھا دیا۔

خیال رہے کہ گلوکارہ نے کئی مشہور گیت گائے ہیں جن میں سب سے زیادہ مشہور ’بے بی ڈول‘ ہے۔

About The Author

Related posts

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *